مفتی نامہ 4

مفتی صاحب، مدرسہ البنات اور خفیہ نکاح ایک دفعہ ہمارے مفتی صاحب نے مدرسۃ البنات کے قیام اعلان فرما دیا۔ لوگ شوق اور عقیدت میں اپنی بچیوں کو مفتی صاحب کی خدمت میں علمِ دین حاصل کرنے کے لیے بھیجنے لگے۔ کچھ دن بعد مفتی صاحب کے نفس پر ‘تقوی’ نے غلبہ پا لیا۔ مدرسہ آنے والی بچیوں میں ایک

مكمل تحریر پڑھیںََ

اٹھتے ہیں حجاب آخر قسط 6

متصوفین دیوبندیت سے نکلنے سے پہلے میں نے دیوبندیت سے پیدا ہونے والی خشک زاہدی کا علاج تصوف میں ڈھونڈنے کی اک تھوڑی سی کوشش بھی کی۔ متصوفین نے مجھے کبھی متاثر نہیں کیا۔ وجد وحال اور محیر العقول قسم کی کہانیوں سے مجھے کبھی دلچسپی پیدا نہ ہو سکی۔ جو چیز میری عقل و فہم مخاطب بنائے بغیر مجھ

مكمل تحریر پڑھیںََ

اٹھتے ہیں حجاب آخر قسط 5

دیوبندیت میرے علمی سفر میں دیوبندیت میں میرا تعارف ایک مضبوط علمی روایت سے ہوا، جو کافی متاثر کن لگی۔ عقائد جو عام طور پر عام لوگوں کو بتائیں جاتے ہیں وہ کافی حد تک معقول اور سادہ ہیں۔ عقائد کے بارےمیں اکابرین کی متنازع قسم کی باتیں اور عبارتیں البتہ نتھار کر بتائی جاتی ہیں یا بتائی ہی نہیں

مكمل تحریر پڑھیںََ

مفتی نامہ 4

مفتی صاحب، مدرسہ البنات اور خفیہ نکاح ایک دفعہ ہمارے مفتی صاحب نے مدرسۃ البنات کے قیام اعلان فرما دیا۔ لوگ شوق اور عقیدت میں اپنی بچیوں کو مفتی صاحب کی خدمت میں علمِ دین حاصل کرنے کے لیے بھیجنے لگے۔ کچھ دن بعد مفتی صاحب کے نفس پر ‘تقوی’ نے غلبہ پا لیا۔ مدرسہ آنے والی بچیوں میں ایک

مكمل تحریر پڑھیںََ

اٹھتے ہیں حجاب آخر 4

 :مولانا طارق جمیل مولانا طارق جمیل کے مسحور کن خطبات سے ہمارے متاثر ہونے کا زمانہ بھی یہی تھا۔ ہمیں جب خبر ملتی کہ مولانا خطاب کے لیے کہیں تشریف لا رہے ہیں، ہم دوڑے جاتے۔ ہمارے دوست اہتمام سے موٹا رومال بھی ساتھلاتے کہ مولانا کا بیان سن کر آنسو جذب کرنے کے لیے ضروری ہو جاتا تھا:‏۔ یہ

مكمل تحریر پڑھیںََ

مفتی نامہ 3

حافظِ قرآن اور احترامِ قرآن ہمارے مدرسے کا ایک ساتھی جو حافظ تھا اور نہایت خوش الحان تھا، قرآن پاک کا زیادہ احترام نہیں کرتا تھا۔ پوچھنے پر ایک دن اس نے اپنے دل کی بات کہی کہ ہم حفاظ کو قرآن سے وحشت ہوتی ہے۔ اور کیوں نہ ہو اس کے حفظ کے لیے ہمیں زدوکوب کیا جاتا ہے،

مكمل تحریر پڑھیںََ

اٹھتے ہیں حجاب آخر قسط 3

تبلیغی جماعت میرے علمی و عقلی سفر کا اگلا مرحلہ دیوبندیت سے تعارف تھا۔ دیوبندیوں کے دلائل بڑی حد تک درست معلوم ہونے لگے۔ دیوبندی ہوئے ہی تھے کہ تبلیغی جماعت والے ہمیں لے اڑے۔ ان کی سادہ نفسی اور اعمال پر اصرار اچھا معلوم ہوا۔ تبلیغی جماعت نے دین داری پھیلانے میں اہم کردار ادا کیا ہے۔بہت سے لوگ،

مكمل تحریر پڑھیںََ

مفتی نامہ 2

ایک مسجد دو مولوی ہمارے مفتی صاحب اور ان کے بڑے بھائی کا ان کی آبائی مسجد کی تولیت پر جھگڑا ہوگیا۔ اتفاق کی بات یہ کہ یہ مسجد بھی ایک جھگڑے کے بعد ہی بنی تھی۔ان کے والد صاحب، جو ایک معروف شخصیت کے خلیفہ مجاز تھے، نے ایک پلاٹ پر قبضہ کر کے یہ مسجد بنائی تھی۔ بہرحال

مكمل تحریر پڑھیںََ

اٹھتے ہیں حجاب آخر قسط 2

بریلویت میرا سفر بریلویت کے سادہ اور پرجوش ماحول سے شروع ہوا، جہاں عوام کا جذبہ ایمانی ایک پر لطف چیز ہوا کرتا تھا۔ آج بھی میرا حال یہ ہے کہ علمی طور پر بریلویت سے بہت دور ہو جانے کے بعد بھی، کسی بریلوی مسجد میں نماز پڑھوں تو سکون کی کیفیت زیادہ پاتا ہوں۔ لیکن حقیقت یہ ہے

مكمل تحریر پڑھیںََ